چترال: جمیعت اہل حدیث کی جانب سے چترال میں آحری افطار پارٹی کا اہتمام


aftaچترال(گل حماد فاروقی) سعودی فرماں روا ں شاہ عبد اللہ کی جانب سے چترال کے لوگوں کیلئے افطار پارٹی کا سلسلہ جاری ہے۔ چترال کے 45 مساجد میں یہ افطار پارٹیاں جمیعت اہل حدیث کے اراکین کے ذریعے دی جاتی ہے۔
رمضان کے آحری ہفتے کے نسبت سے چترا ل کے ایک نجی کالج میں ایک مذہبی جماعت کے کارکنان اور دیگر معززین علاقہ کیلے افطار پارٹی کا اہتمام کیا گیا۔ اس موقع پر مولوی محمد عمر قریشی امیر مرکز ی جمیعت اہل حدیث مہمان حصوصی تھے۔
جبکہ افطار پارٹی میں جماعت اسلامی کے کارکن اور اراکین کے علاوہ علاقے کے معززین نے بھی کثیر تعداد میں شرکت کی۔ 
محمد عمر قریشی کا کہنا ہے کہ یہ اس سال اور رمضان کا آحری پارٹی ہے انہوں نے کہا کہ یہ سعودی فرماں روا ں شاہ عبد اللہ کی جانب سے پاکستانی بھائیوں کیلئے ایک تحفہ ہے جس کے زریعے مسلمانوں کو ایک جگہہ اکھٹا کیا جاتا ہے۔
تقریب میں آئے ہوئے چند مہمانوں نے کہا کہ انہیں اس پارٹی میں شرکت کرنے پر بڑی خوشی ہوئی کیونکہ اس قسم کے پارٹی اور لوگوں کی اجتماع جمع کرنے سے ایک دوسرے کے ساتھ محبت بڑھتا ہے اور مسلمان ایک دوسرے کے قریب مل بھیٹنے کا موقع پاتے ہیں جو عام زندگی میں بہت کم ملتا ہے۔
افطار ڈنر کے بعد نماز مغرب بھی اسی مسجد میں ادا کی گئی۔ 
اس موقع پر نماز مغرب کے بعد ایک محتصر تقریب بھی منعقد ہوئی جس میں قرآن پاک کی شان میں علماء نے اظہار حیال کیا۔ انہوں نے کہا کہ قرآن پاک اسی مہینے میں نازل ہوا اور مسلمانوں کو چاہئے کہ قرآن پاک کی تلاوت اور ترجمہ کرکے اسے اپنی عملی زندگی میں لائے۔ 
انہوں نے کہا کہ قرآن پاک کا لوگوں پر محتلف حقوق ہیں جن میں قرآن پاک کا ایک حصی یاد کرنا اور اسے ہر وقت پڑھنا۔ قرآن پاک پر اس عقیدے کے ساتھ ایمان لانا کہ یہ اللہ کی آحری کتاب ہے۔ اس کی تجوید پڑھنا، معنی سمجھنا اور قرآنی تعلیمات کو اپنے زندگی میں لانا اور جو کچھ سیکھا اسے دوسروں تک منقل کرنا بھی قرآن کی حقوق میں شامل ہیں۔
آحر میں ملک کی دفاع اور حفاظت کیلئے اجتماعی دعا مانگی گئی اور مسلمانوں کی اتفاق و اتحاد کیلئے بھی دعائیں مانگی گئیں۔ 
افطار پارٹی میں کثیر تعداد میں لوگوں نے شرکت کی۔

آپ یہ صفحات بھی دیکھنا پسند کریں گے ۔ ۔ ۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *