سکردومیں بجلی کی انکھ.مچولی دوبارہ شروع

سکردو(مبشر حید)بجلی کی انکھ.مچولی دوبارہ شروع ہوگئی ،سرشام بجلی بند ہونا معمول بن گیا اور اکثر علاقوں میں دن کے وقت بھی بجلی بند رہنا معمو ل بن گیا ،کچھ دن کا جلوہ دیکھا کر بالاخر بجلی اپنی پرانی پوزیشن پرواپس آگئی لوڈ شیڈنگ کی وجہ سے روزمرہ کے معاملات ٹھپ ہو کر رہ گئے اکثر علاقے میں شام کے وقت بجلی گھنٹوں غائب ہو جاتی ہے جبکہ اکثر علاقوں میں بغیر کسی اطلاع کے پورا دن بجلی بند رکھی جاتی ہے دوبارہ لوڈ شیڈنگ شروع ہونے پر عوام الناس میں دوبارہ تشویش کی لہر ڈور گئی عوامی حلقوں کا کہنا ہے کہ لوڈ شیڈنگ کا کچھ مہینوں تک خاتمہ ہو گیا تاہم دوبارہ سے لوڈ شیڈنگ شروع ہوگئی بجلی کی غیر منصفانہ تقیسم کی وجہ سے مسائل جنم لے رہے ہیں کچھ دن بعد سردیاں شروع ہو رہی ہیں اور سردیوں کے موسم میں بجلی کی طلب قدرے بڑھ جاتی ہے بڑھتی ہوئی ضروریات کو مدنظر رکھتے ہوئے حکومت بجلی کی پیداوار بڑھانے کے لیے اقدامات کرے عوامی حلقوں نے اپیل کی ہے کہ غیر اعلانیہ لوڈ شیڈ نگ کے خاتمے کے لیے بھی خصوصی اقدامات کیے جائیں ۔دوسری جانب محکمہ برقیات  کے تما م دعوے دھرے کے دھرے رہ گئے محکمہ برقیات بل نادہندہ گان کے خلاف کاروائی کرنے میں ناکام لاکھوں کی رقوم ریکور کرنے کے لیے کوئی لائحہ عمل طے نہیں کیا گیا کئی بار کاروائی کرنے کا اعلانات اور دعووں کے باوجود تاحال کسی بھی بل نادہندہ کے خلاف کسی طر ح کی کوئی کاروائی عمل میں نہیں لائی گئی گزشتہ سال محکمہ برقیات کی طرف سے یہ دعوا کیا گیا ہے کہ سال رواں تمام بقایاجات وصول کیے جائیں گے تاہم کوئی تسلی بخش ریکوری نہیں ہو سکی زرائع کے مطابق بل ناہندہ گان کے کی ایک بڑی تعداد موجود ہے جنہوں نے کئی سال سے بجلی کے بل ادا نہیں کیے جن کی مالیت لاکھوں میں ہے اور ان میں گھریلو صارفین کے علاوہ مختلف دفتاتر بھی شامل ہیں جبکہ عوامی حلقوں کا کہنا ہے کہ اکثر لائن مین بجلی کے بل ان تک ٹھیک ٹائم پر نہیں پہنچاتے جس کی وجہ سے انہیں پریشانی ہو رہی ہے محکمہ کے زرائع نے کہا کہ بل کی ادائیگی کے لیے قسط ور سسٹم بھی شروع کیا گیا ہے اس کے باوجود بھی ریکوری سسٹم قابل ستائش نہیں ۔بل ریکوری کے لیے مناسب اور منظم نظام متعارف کرایا جائے ۔

 

آپ یہ صفحات بھی دیکھنا پسند کریں گے ۔ ۔ ۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *