وندو اسسٹنٹ کمشنر آفس میں امیدوارقانون ساز اسمبلی گلگت بلتستان منظور پروانہ پر حملہ

manzorr parwana sosttodayروندو24 اکتوبر سوست ٹوڈے( پریس ریلیز) روندو اسسٹنٹ کمشنر آفس میں ایک شخص نے امیدوارقانون ساز اسمبلی گلگت بلتستان منظور پروانہ پر اچانک حملہ کر دیا ۔عملہ مال نے بچ بچاؤ کرکے حملہ آور شخص کو دفتر سے باہر نکال دیا، حملہ آور شخص پہلے سے لکھا ہوا بے بنیاددرخواست لے کر تھانہ پہنچا اور الزام لگایا کہ منظور پروانہ نے اسے پسٹل اور چاقو سے مارنے کی کوشش کی ہے ، پولیس نے بر وقت کاروائی کرتے ہوئے گواہان کے بیانات قلم بند کر لیاتو تمام الزامات غلط ثابت ہو گیا ، پولیس نے درخواست دہندہ کو گرفتار کر کے پوچھ کچھ کی تو انہوں نے انکشاف کیا کہ وہ ان پڑھ ہے اس کے بڑے بھائی شمشاد نے اسے یہ درخواست لکھ کر تھانہ بھیجا تھا اور منظور پروانہ کو پھنسانے کا کہا تھا تاکہ وہ آنے والے انتخابات میں نا اہل ہو سکے۔ پولیس ملزمان گلزار اور ماسٹر مائنڈ شمشاد کے خلاف 182 کی کاروائی کرنے میں منتخب نمائندے کی دباؤ کا شکار ہے اور قانونی کاروائی معطل کی ہوئی ہے۔منظور پروانہ نے کہا ہے کہ مجھ پر حملہ ایک سوچے سمجھے منصوبے کے تحت کیا گیا ہے میں اپنے اوپر حملہ کرنے والے کو تو معاف کر سکتا ہوں لیکن اس حملے کے ماسٹر مائنڈ اور جھوٹا الزام لگا کرمیری عزت اور شہرت کو نقصان پہنچانے کی مذموم سازش کرنے والوں کو معاف نہیں کر سکتا ، اگر پولیس نے ملزمان کو کھلا چھوڑ دیا تو اس طرح کی بے ہودہ الزام کسی اور معزز شہری پر بھی لگا سکتے ہیں ۔انہوں نے آئی جی پی ، ڈی آئی جی اور ایس ایس پی سکردو سے اپیل کی ہے کہ خطے میں دہشت گردی ، شر انگیزی اور تہمت کی حوصلہ شکنی کے لئے ملزمان کے خلاف موثر کاروائی کرکے محکمہ پولیس کو دھوکہ دے کر معزز لوگوں کی کردار کشی کرنے والوں کا محاسبہ کریں۔

 

آپ یہ صفحات بھی دیکھنا پسند کریں گے ۔ ۔ ۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *