گورنمٹ اداروں کیخلاف اشتعال انگیز تقاریر کرنے کے الزام میں امیدوار گلگت بلتستان اسمبلی ڈاکٹر محمد زمان کودیامر پولیس نے گرفتار کرلیا

چلاس(بیورورپورٹ)۔ ۔ایس ایچ او سٹی تھانہ چلاس شاہ سرور نے پولیس کی خصوصی ٹیم کے ہمر ا ڈی سی چوک چلاس میں چھاپہ مار کر گرفتار کرکے حوالات میں بند کردیا ،ادھر ڈاکٹر محمد زمان کی بلاجواز گرفتاری کے خلاف چلاس اور داریل تانگیر میں ضلعی انتظامیہ کے خلاف عوام اور سول سو سائٹی نے سخت احتجاجی مظاہرہ کیا چلاس میں مظاہرین نے مولانا عبدالمحیط کی قیادت میں سٹی تھانہ چلاس کا گھراو کیا اور ضلعی اتظامیہ کے خلاف سخت نعرا بازی بھی کی۔سٹی تھانہ کے باہر ڈاکٹر زمان کی رہائی کیلئے دھرنا دئے بیٹھے مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے عوامی ایکشن کیمیٹی کے سرکردہ رہنما مولنا عبدالمحیط ،شاہ ناصر شبیر احمد،نمبردار سہیل احمد و دیگر نے کہا کہ ڈاکٹر زمان کو ضلعی انتظامیہ نے بلاجواز گرفتار کیا ہے ،حق کیلئے آواز اٹھانے والوں کو گرفتار کیا جارہا ہے جو کہ ظلم اور ناانصافی کی انتہا ہے۔انہوں نے کہا کہ حکومت جلد از جلد ڈاکٹر زمان کو رہا کرے ورنہ یہ احتجاجی ہجوم سٹی تھانہ کے گھیٹ توڑ کر ڈاکٹر کو رہا کرادیں گے،انہوں نے کہا کہ گندم سبسڈی کے حصول میں ڈاکٹر زمان ہمارے ہیرو ہیں ان کی بلاجواز گرفتاری برداشت نہیں کریں گے۔انہوں نے کہا کہ جب تک ڈاکٹر زمان رہا نہیں ہوتا اس وقت تک دھرنا جاری رہے گا ۔داریل تانگیر میں بھی ڈاکٹر زمان کی بلاوجہ گرفتاری کیخلاف عوام اور طلبہ تنظموں نے سخت احتجاج کیا ،اور جگہ جگہ سڑکیں بلاک کرکے رکاوٹیں کھڑی کر دیں ۔ادھر چلاس میں ہزاروں کے احتجاجی مظاہرین کے عوامی پریشر پر سٹی تھانہ چلاس کے عملہ نے ڈاکٹر زمان کو شخصی ضمانت پر رہا کر دیا ،اور آج سول جحج کے عدالت میں پیش ہونے کا حکم دیا ۔ادھر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ایس پی دیامر راوف قیصرانی نے کہا کہ اپریل 2014 میں ڈاکٹر زمان نے گورنمٹ اور خفیہ اداروں کے خلاف کیچھ اشتعال انگیز تقاریرکئے تھے جس کے بعد اس پر مختلف مقدمات درج کئے گئے تھے ،اور آج دیامر پولیس نے انہیں گرفتار کرلیا ہے ،انہوں نے کہا ڈاکٹر زمان شخصی ضمانت پر ہیں اور ہمارے کسٹڈی میں ہے جس کو پولیس آج عدالت میں پیش کرے گی۔سٹی تھانہ چلاس کے باہر ڈاکٹر زمان کی شخصی ضمانت پر رہا ہونے کے بعد عوام نے ڈاکٹر زمان زندہباد کے فلک شگاف نعرے لگائے۔اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر زمان نے کہا کہ گلگت بلتستان کے حقوق کیلئے کبھی بھی پیچھے نہیں ہٹیں گے اور حقوق مانگ کر نہیں چھین کر لیں گے ۔انہوں نے کہا کہ پولیس کے جھوٹے مقدمات سے ہم خوف زدہ اور ڈرنے والے نہیں ہیں ،ہم حق کیلئے ہمیشہ سر کھڑاکرکے بات کریں گے۔اس موقع پر انہوں نے دیامر کے عوام کا شکریہ بھی ادا کیا اور ائیندہ اپنی تمام تر جدوجہد قوم کے مسائل کے حل کیلئے قربان کرنے کا بھی فیصلہ کیا ۔میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹر زمان نے کہا کہ قانوں سے بھاگنے والہ سپوت نہیں ہوں قانوں کا احترام کرتا ہوں لیکن دیامر پولیس کے ہتک امیز رویہ پر دکھ ہے ۔انہوں نے کہا کہ وا آج عدلت میں پیش ہونگے ۔

آپ یہ صفحات بھی دیکھنا پسند کریں گے ۔ ۔ ۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *