سابقہ حکومت کم از کم ماہ رمضان اور ماہ محرم میں بجلی اور پانی کی بالا تعلطیل فراہمی کو یقنی بنارہی تھی مگرموجودہ حکومت اس سلسلے میں مکمل ناکام نظر آرہی ہے- شاہد حسین

گلگت (پریس ریلز)بجلی اور پانی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ حکومت کے دعوں کی نفی کر رہی ہے سابقہ حکومت کم از کم ماہ رمضان اور ماہ محرم میں بجلی اور پانی کی بالا تعلطیل فراہمی کو یقنی بنارہی تھی مگرموجودہ حکومت اس سلسلے میں مکمل ناکام نظر آرہی ہے ان خیالات کا اظہار مصروف وسیاسی ورکر اور بلدیاتی امیدوار مجینی محلہ ڈومیال گلگت شاہد حسین ساحل نے اپنے ایک فریس ریلیز میں کہا ان کا کیہنا تھا کہ وزیراعلی گلگت بلتسان حافظ حفیظ الرحمن کو چاہیے کہ وہ وزیراعلی پنجاب میاں شہباز شریف کی نقل کرنے کے بجائے اپنے صوبے کے وسائل اور مسائل کو مدے نظر رکھ کر اقدامات کرے تکہ عوام کو اپنے مسائل کے حل ہونے کی کوئی امید پیدا ہوسکے ورنا حوا میں تیر چلانے سے عوامی مسائل حل نہیں ہوتے ان کا مزید کہنا تھا کہ ماہ رمضان میں افطاری اور سحری کے وقت علاقے میں اکثر تاریکی کا راج ہوتا ہے اور پانی کی عدم دستیابی سے روزہ داروں بجلی اور پانی کی لوڈشیڈنگ سے جہاں روزہ دار ازیت میں وبتلا ہیں وہیں لوڈشیڈنگ کے باعث بازار کارخانے بند اور کاروبار بھی مفلوج ہو کر رہ گیا ہے اس شدید گرمی میں بجلی اور پانی کی لوڈشیڈنگ کسی قیامت سے کم نہیں حکومت وقت سے مطالبہ ہے بجلی اور پانی کی لوڈشیڈنگ پر قابو پانے کیلئے برپور اقدامات کرے بعد ان دیگر عوام کو لیکر سڈکوں پہ آینگے جسے حکومت کیلے مشکلات پیدا ہونگی ۔

 

آپ یہ صفحات بھی دیکھنا پسند کریں گے ۔ ۔ ۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *