سوست ڈرائی پورٹ میں کسٹمز حکام کے جانب سے کسی قسم کی کوئی ناجائز لین دین نہیں ہورہی ہے- امپورٹرز اینڈ ایکسپورٹرز ایسویشن گلگت بلتستان

1ف (2015_01_08 20_57_15 UTC)
سوست گوجال(پ ر) امپورٹرز اینڈ ایکسپورٹرز ایسویشن گلگت بلتستان اور کسٹمز کلئرتنگ ایجنٹس ایسویشن کا مشترکہ ہنگامی اجلاس سلک روٹ سوست ڈرائی پوررٹ، سوست میں ایسوزیشن کے دفتر میں ایسویشن کے صدور کے زیر صدارت منقد ہوا۔اور اتفاق رائے سے مندرجہ ذیل امور پر اتفاق کیا گیا۔
1۔ موجودہ کسٹمز انتظامیہ نے گلگت بلتتان میں امپورٹ ایکسورٹ کا شفاف اور غیر جانبدارنہ طریقہ اپنایا ہے۔
2۔ امپورٹرز اورر ایکسپورٹرز کو قانونی دائرہ اختیارمیں تمام ممکن سہولت دی جارہی ہے۔
3۔ مندرجہ بالا طریقہ کار سے اس وقت امپورٹرز و ایکسپورٹز سوست ڈرائی پورٹ کی تاریخ کا سب سے زیادہ ٹیکس ادا کررہے ہیں۔ جو ریکارڈ سے عیاں ہے۔
. صدر گلگت بلتستان چیمبر آف کامرس جاوید حسین کے خلاف کارِ سرکار میں مداخلت اور چار عدد کنٹینرز بلاٹیکس ادا کئے غیر قانونی طریقہ سے زبردستی ڈرائی پور ٹ سے باہر لے جانے پر FIR 01/2015بتاریخ 16.06.2015پولیس اسٹیشن سوسست میں درج کی گئی تھی
5. مندرجہ بلا کیس میں دس دن گرفتار رہنے کے بعد جاوید حسین آج ضامنت پر رہا ہے اور کیس عدالت میں زیر سماعت ہے ۔ جاوید حسین کو بلیک لسٹ لسٹ کرنے اور صفدرٹریڈنگ لاسنس منسوخ کرنے کےلئے کسٹمز حکام نے شو کاز کیا ہوا ہے۔
مندرجہ بالا حقائق کی روشنی میں اس بات کی سختی سے تردید کی جاتی ہے کہ جو الزمات کسٹمز حکام پر لگائے گئے ہیں وہ بے بنیاد اور حقائق کے منافی ہیں۔ سوست ڈرائی پورٹ میں کسٹمز حکام کے جانب سے کسی قسم کی کوئی ناجائز لین دین نہیں ہورہی ہے۔سوست ڈرائی پورٹ میں تمام تر ٹیکس قانون کے مطابق وصول کئےجاتے ہیں۔ لہذٰا ہم ایف بی آر اور کسٹم کے حکام بالا سے گزارش کرتے ہے کہ اس قسم کے بے بنیاد اخباری بیانات کی طرف کوئی تونہ نہ دی جائے اس طرح جھوٹے الزامات لگانے کے مقصد سوست ڈرائی پورٹ کو بدنام کرنے اور گلگت بلتستان کی واحدتجارت کو بدنام کرنے کی ناکام کوشش کے سوا کچھ نہیں ہے۔ایسویشن اس بات کا اعادہ کرتی ہے کہ جس سہل اور شفاف طریقے سے سوست ڈرائی پورٹ سے تجارت ہورہی ہے اس کو نہ صرف جاری رکھا جائےگا بلکہ وقت کے ساتھ ساتھ اس کو فروغ دیا جائے گا۔

آپ کی دلچسپی کے لیے :  Bribery at Sost Dry Port; Complaint lodged against customs Officials posted at Sost

 

آپ یہ صفحات بھی دیکھنا پسند کریں گے ۔ ۔ ۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *