گلگت- سپیشل کمیونیکئشن آرگنائزیشن کی طرف سے انٹرنیٹ کی ناقص سروس کے خلاف صحافی سراپا احتجاج بن گئے۔

internet service in gilgit
گلگت(نعیم انور) سپیشل کمیونیکئشن آرگنائزیشن کی طرف سے انٹرنیٹ کی ناقص سروس کے خلاف صحافی سراپا احتجاج بن گئے۔پیر کے روز گلگت پریس کلب کے زیر اہتمام گلگت پریس کلب چنارباغ کے سامنے صحافیوں نے انٹرنیٹ کی انتہائی ناقص سروس کے خلاف بھرپور احتجاج کرتے ہوئے پرائیویٹ کمپنیوں کو گلگت بلتستان میں انٹرنیٹ سروس مہیا کرنے کی اجازت دینے کا مطالبہ کیا۔صحافیوں کا کہنا تھا کہ انٹرنیٹ کی سست رفتاری کے باعث وہ بری طرح متاثر ہو رہے ہیں اور وقت پر خبروں کی ترسیل میں شدید مشکلات کا سامنا ہے۔بار بار شکایات کے باؤجود بھی ایس سی او کی طرف سے انٹرنیٹ سروس میں کوئی بہتری نہیں آرہی بلکہ آئے روز سروس مزید ابتر ہوتی جا رہی ہے۔اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے گلگت پریس کلب کے صدر طارق حسین شاہ نے کہا کہ ایس سی او ہمارے لیے درد سر بنا ہوا ہے اور اس جدید دور میں بھی ہم انٹرنیٹ کی سہولت سے محروم ہے۔ایس سی او کی ناقص سروس سے صحافی اپنے خبروں کو قومی و بین الاقوامی اداروں تک نہیں پہنچا ہا رہے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ ہم نے ہمیشہ اپنی شکایتیں درج کروائی مگر ایس سی او کی طرف سے سسٹم میں کوئی بہتری نہیں آئی اب ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ ایس سی او کی ناقص سروس کو فوری بند کیا جائے اور مختلف پرائیویٹ اداروں کو گلگت بلتستان میں انٹرنیٹ سروس مہیا کرنے کی اجازت دی جائے تاکہ ہم اس جدید ٹیکنالوجی سے بھرپور فائدہ اٹھا سکے۔انہوں نے حکومت سے فوری طور پر تھری جی اور فور جی سروس فراہم کرنے مطالبہ کیا، صحافیوں نے ایس سی او کی ناقص سروس نا منظور،ایس سی او بند کرو،تھری جی،فور جی کی اجازت دوکے نعرے لگائے۔صحافیوں نے ہاتھوں میں پلے کارڑز اٹھا رکھے تھے جن پر ایس سی او کے خلاف اور پروائیویٹ کمپنیوں کو سروس مہیا کرنے کی اجازت دینے کے حق میں نعرے درج تھے۔بعد ازاں صحافی حضرات پر امن طور پر منتشر ہو گئے۔

 

آپ یہ صفحات بھی دیکھنا پسند کریں گے ۔ ۔ ۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *